زرعی یونیورسٹی پشاور ایڈوانسڈ سٹڈیز اینڈ ریسرچ بورڈ کا 64 واں اجلاس:

Spread the love

زرعی یونیورسٹی پشاور

ایڈوانسڈ سٹڈیز اینڈ ریسرچ بورڈ کا 64 واں اجلاس

گزشتہ روز زرعی یونیورسٹی پشاور کا ایڈوانسڈ سٹڈیز اینڈ ریسرچ بورڈ (اے ایس آر ہی) کا 64 واں میٹنگ زیر صدارت وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر جہان بخت منعقد ہوا جس میں تمام ممبران نے شرکت کی۔ اجلاس کے سیکرٹری ڈسار پروفیسر ڈاکٹر محمد ساجد نے ایجنڈا پیش کیا۔ جس پر کافی غوروخوض کے بعد 63 ویں اے ایس آر بی منٹس کی تصدیق کی گئی اور اے ایس آر ہی کے 63 ویں نفاذ کی  حیثیت کو نوٹ کیا گیا۔ مختلف شعبوں کے پی ایچ ڈی سکالرز کے 14 پی ایچ ڈی سئناپسسز کا جائزہ لینے کے بعد منظوری دی گئی اور تحقیق کو مزید مضبوط بنانے کے لیے کچھ مفید ہدایات بھی دی گئیں۔ 11 پی ایچ ڈی اور 10 ایم فل/ایم ایس اسکالرز کو ان کی ڈگری کی ضروریات پوری کرنے کے لیےمدت میں توسیع دی گئی۔ بورڈ نے پاکستان کنٹری ڈائریکٹری (پی سی ڈی) میں پی ایچ ڈی سکالرز کی شمولیت سے متعلق مسئلے سے نمٹنے کے لیے چھ رکنی کمیٹی تشکیل دی گئی، جن میں ڈین پروفیسر ڈاکٹر حمایت اللہ خان، پروفیسر  ڈاکٹر محمد ذوالفقار، ڈی اے ایس آر پروفیسر ڈاکٹر محمد ساجد، کنٹرولر امتحانات، ڈائریکٹر کوالٹی ایشورنس اور ڈاکٹر ملک ایم شفیع شامل ہیں۔

اس کے علاوہ مختلف شعبہ جات کے پی ایچ ڈی سکالرز کے پی ایچ ڈی مقالوں پر فارن ایوالیویشن رپورٹس پر تبادلہ خیال کیا گیا اور اس کے مطابق فیصلے کئے گئے، 14 میں سے چار رپورٹس اسکالرز کی طرف سے ضروری تبدیلیوں کو شامل کرنے کے بعد غیر ملکی پروفیسرز /معائنہ کاروں کو دوبارہ بھیج دینے کی ہدایات دیئے گئے اور باقی 8 اسکالرز کو پی ایچ ڈی دفاعی سیمینارز کے لئے ضروری ھدایات کے بعد اہل قرار دیا گیا۔

وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر جہان بخت نے کامیاب اجلاس کے انعقاد پر تمام ممبران کا شکریہ ادا کیا۔